the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

اوپینین پول

کیا ہندوستان میں خواتین کی حفاظت اب بھی دور کا خواب ہے؟

ہاں
نہیں
کہہ نہیں سکتے
نئی دہلی یکم اکتوبر(یواین آئی)سپریم کورٹ نے وقت رہتے حکومت کے ذریعہ لاک ڈاؤن نہ لگائے جانے اور امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے استقبال کے لیے کیے گئے’نمستے ٹرمپ‘انعقاد میں عالمی ادارہ صحت(ڈبلی ایچ او)کی ہدایات کی خلاف ورزی کے الزامات کی تحقیقات کے لیے کمیشن کا قیام کرنے کے مطالبہ سے متعلق درخواست جمعرات کو خارج کردی۔
جج ایل ناگیشور راؤ کی صدارت والی بنچ نے معروف وکیل پرشانت بھوشن کے ذریعہ کچھ سابق بیوروکریٹس کی جانب سے دائر درخواست یہ کہتے ہوئے خارج کردی کہ یہ معاملہ پارلیمنٹ میں بحث کا ہوسکتا ہے، لیکن عدالت میں بحث کا نہیں۔عدالت نے کہا کہ درخواست سماعت کے قابل نہیں ہے۔
درخواست کی سماعت کے دوران مسٹر بھوشن نے کہا کہ’نمستے ٹرمپ‘پروگرام میں لاکھوں لوگوں نے شرکت کی تھی، جبکہ اس سے قبل چار فروری کو وزارت داخلہ نے ہدایات جاری کی تھی کہ بڑی تعداد میں لوگ ایک جگہ جمع نہ ہوں، اس کے بعد بھی نمستے ٹرمپ پروگرام میں لوگوں کو حکومت کے ذریعہ ہی جمع کیا گیا۔اتنا ہی نہہں، لاک ڈاون کی وجہ سے بڑی تعداد میں لوگ بے روزگار ہوئے ہیں۔
انہوں نے اگلی دلیل دی کہ حکومت کورونا کو روکنے میں ناکام رہی اور اس سے معیشت تباہ ہوگئی۔معیشت میں 24 فیصدی کی کمی ہوئی۔
انہوں نے کہا کہ لاک ڈاون بغیر کسی اکسپرٹ کمیٹی سے تبادلہ خیال کیے نافذ کیا گیا۔حکومت پارلیمنٹ میں کہتی ہے کہ ڈاکٹروں کی موت کا کوئی اعدادوشمار نہیں ہے۔پولیس اہلکاروں کی موت کا کوئی اعدادوشمار نہیں ہے۔روزگار جانے کا کوئی اعدادوشمار نہیں ہے۔لاک ڈاون کے دوران بڑی تعداد میں مہاجر مزدوروں نے ہجرت کی۔حکومت کے پاس لاک ڈاون کا کوئی پلان نہیں تھا۔

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
http://st-josephs.in/
https://www.darussalambank.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2020 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.