the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com



نمک کھانے کا ذائقہ اچھا بھی سکتا ہے اور خراب بھی، لیکن زیادہ تر لوگ یہ بات نہیں جانتے کہ نمک صحت کے ساتھ بھی وہی کرتا ہے جو ذائقہ کے ساتھ. ہمارے جسم کیلئے نمک کی مقدار مقرر ہے تو نمک کی مقدار اس سے کم یا زیادہ ہوئی تو توازن بگڑ جاتا ہے جو صحت کے لئے نقصان دہ ہے. زیادہ مقدار میں نمک یا چینی کے استعمال سے جسم میں كےلوريذ بڑھتی ہیں اور کینسر کا خطرہ بھی بڑھتا ہے.

ہائی بلڈ پریشر

ماہرین کے مطابق نمک سے ہائی بی پی (بلیڈ پریشر) کا براہ راست تعلق ہے. اس لئے اپنے کھانے میں نمک کم ڈالیں. ساتھ ہی اگر آپ کو کبھی کھانے میں نمک کم لگے تو اسے اوپر سے نہ ڈالیں. یہ یاد رکھیں کہ نمک کا زیادہ مقدار میں استعمال آپ کے خون ٹرانسمیشن اور بلڈ پریشر کو بگاڑ سکتا ہے.

دل کی بیماری

ایسا کہا جاتا ہے کہ نمک کے زیادہ استعمال سے دل کی بیماری کا خطرہ بڑھ جاتا ہے. اس لئے صحت مند دل کی خاطر آپ اپنے کھانے میں نمک کی مقدار کا توازن برقرار رکھے.

پانی کی کمی

جسم میں زیادہ نمک کی مقدار سے پانی کی کمی یعنی ڈهاڈریشن کی مسئلہ ہو سکتا ہے. جسم میں ڈهاڈریشن مسئلہ نہیں ہو اس کے لئے آپ کو نمک کی متوازن مقدار لینے کے ساتھ بھرپور پانی پئے.

پانی کی برقراری

جسم میں نمک کی مقدار زیادہ ہونے پر پانی ضرورت سے زیادہ جمع ہو جاتا ہے. اس صورت حال واٹر برقراری یا پھلوڈ برقراری کہلاتی ہے. ایسی صورت میں ہاتھ، پاؤں اور چہرے میں سوجن ہو جاتی ہے. اس سے جلد بھی سوج جاتی ہے. تو جسم میں نمک کی مقدار کی توجہ رکھنے کے ساتھ بھرپور پانی کا استعمال کرنا چاہئے.

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

اوپینین پول

کیا آپ شہریوں کے لئے سنگل کثیر المقاصد شناختی کارڈ کے خیال کی حمایت کرتے ہیں؟

ہاں
نہیں
کہہ نہیں سکتے
To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2019 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.