the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

ممبئی،8دسمبر(یواین آئی)بطور ویلن اپنے کریئر کا آغاز کرنے والے شتروگھن سنہا اپنے زبردست انداز ،باغی تیور اور مکالمہ گوئی کے دم پر شتروگھن سنہا نے شائقین کو اس قدر دیوانہ بنایا کہ ہیروکے مقابلے میں انہیں زیادہ واہ واہی ملی۔
یہ فلم انڈسٹری کی تاریخ میں پہلا موقع تھا جب کسی ویلن کے پردے پر آنے پر شائقین کی تالیاں اور سیٹیاں بجنے لگتی تھیں۔
 ستر کی دہائی میں جب شتروگھن سنہا نے فلم انڈسٹری میں قدم رکھا تو بطور اداکار کام پانےکےلئے وہ اسٹوڈیو در اسٹوڈیو بھٹکتے رہے۔
وہ جہاں بھی جاتے انہیں کھڑی کھوٹی سننی پڑتی۔
کچھ فلم سازوں نے ان سے کہا کہ آپ کا چہرہ مہرہ فلم انڈسٹری کےلئے مناسب نہیں ہے اگر آپ چاہیں تو بطور ویلن آپ کو فلموں میں کام مل سکتا ہے۔

شتروگھن سنہا نے تو ایک بار یہاں تک سوچ لیا کہ ممبئی میں رہنے سے اچھا ہے کہ اپنے گھر پٹنہ لوٹ جایا جائے۔
بعد میں انہوں نے بطور ویلن ہی فلم انڈسٹری میں اپنی پہچان بنانے کےلئے جدوجہد کرنا شروع کردیا۔
جلد ہی ان کی محنت رنگ لائی اور اپنی رعب دار شخصیت اور مکالموں کی ادائیگی کے ذریعہ شتروگھن سنہا نےشائقین کو اپنی جانب راغب کرلیا۔

شتروگھن سنہا کی مقبولیت کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ فلم میں ان کے حصے میں محض دو یا تین سین ہی رہتے لیکن ان سینز میں جب کبھی وہ نظر آتے تو اپنی مکالمہ گوئی اور تیور سے وہ ہیرو کے پر بھی بھاری پڑتے۔

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
http://st-josephs.in/

اوپینین پول

کیا تلنگانہ حکومت کو ریاست میں قومی آبادی کے رجسٹر پر عمل درآمد روکنا چاہئے؟

ہاں
نہیں
کہہ نہیں سکتے
https://www.darussalambank.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2020 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.