the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

انگلش ویکلی

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

اوپینین پول

گجرات اسمبلی انتخابات میں کون سی سیاسی پارٹی جیتے گی؟

عام آدمی پارٹی
کانگریس
بی جے پی
نئی دہلی،25جولائی (ایجنسی) عمران ہاشمی ان بالی ووڈ ستاروں میں سے ایک ہیں جو اپنی من کی بات کہنے سے ذرا بھی نہیں ہچکتے. انہوں نے اپنی محنت سے انڈسٹری میں نام کمایا ہے. کیریئر کی شروعات ہی پردے پر ان کی امیج ایک سیریل كسر کی بن گئی، لیکن انہوں نے اس کے بارے میں بات کرنے میں کبھی شرم نہیں کی. حال ہی میں انہوں نے ہندوستان ٹائمز کو دیے گئے انٹرویو میں اس بات کو تسلیم کیا ہے سیریل كسر والی امیج نے انہیں بہت فائدہ پہنچایا ہے.

عمران نے کہا، '' میرے کیریئر کی بہت سی ابتدائی فلموں میں مجھے كسینگ سین کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے. ایسے میں یہ ٹیگ قدرتی طور پر میرا حصہ بن گیا. '' انہوں نے کہا، '' یہ ایسا کچھ نہیں تھا جس سے میں دور بھاگوں. میں ایمانداری سے کہوں تو اس ٹیگ سے مجھے بہت فائدہ ہوا ہے. 

فی الحال اتنے سالوں بعد اب



عمران نے اپنی اس ٹیگ کو دور کرنے کا من بنا لیا ہے. حالانکہ یہ اتنا آسان نہیں ہوگا یہ ان کی گروتھ میں رکاوٹ بن سکتا ہے. عمران کا کہنا ہے، '' جب آپ ایک اداکار کی حیثیت سے تیار کر رہے ہوتے ہیں اور نئی اول مختلف چیزیں آزمانے کی کوشش کرتے ہیں، تو ٹیگ آپ کے لئے رکاوٹ بن جاتا ہے. لوگ آپ کو ایک خاص قسم کے رول میں ہی دیکھنا زیادہ پسند کرتے ہیں، لیکن ایک وقت آتا ہے جب ہر ایکٹر کا ایک ہی طرح کے رول کرنے سے من بھر جاتا ہے. مجھے لگتا ہے میرا یہ وقت آ گیا ہے اور مجھے نئی قسم کے کردار تلاش کرنے کی ضرورت ہے. عمران نے کہا کہ ان کا یہ بدلا ہوا طور 1 ستمبر کو ریلیز ہونے والی فلم 'بادشاهو' میں دکھایا جائے گا.

سنی لیونی کے بارے میں بات کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ سنی بہت پروفیشنل ہیں اور ان کے ساتھ کام کرنے میں کافی مزہ آیا عمران نے سنی کے ڈانس کی تعریف کرتے ہوئے انہیں اس معاملے میں خود سے بہتر بتایا ہے.

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
http://st-josephs.in/
https://www.darussalambank.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2022 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.