the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

لاس اینجلس،6اپریل(ایجنسی) نیند کی کمی سے بزرگوں میں الزائمر کی بیماری کی طرح بہت سے جسمانی اور ذہنی خرابی کی شکایت پیدا ہونے کا خطرہ بڑھ سکتا ہے جبکہ گہری نیند لینے سے شخص ہمیشہ جوان بنا رہ سکتا ہے.

محققین نے کہا ہے کہ عمر بڑھنے کے ساتھ شخص کی نیند بار بار ٹوٹتی ہے، اسے بار بار ٹوائلٹ استعمال کرنے جانا پڑتا ہے اور اسی قسم کی دیگر رکاوٹوں ان کی نیند میں خلل ڈالتی ہیں. عمر بڑھنے کے ساتھ اس طرح گہری نیند نہیں لے پاتا جیسی وہ جوانی میں لیتا ہے.

محققین نے ان جائزوں کا جائزہ لیا جن میں یہ دکھایا گیا ہے کہ بزرگ شخص کے دماغ کو وہ سست دماغ لہریں پیدا کرنے میں مسئلہ ہوتی ہے جن سے گہری نیند آتی ہے. انہوں نے کہا کہ جوانی میں گہری نیند لینے والے شخص کو فاسد اور غیر اطمینان بخش نیند کی شکایت 30 سال کی عمر کے بعد شروع ہو سکتی ہے جس کی وجہ سے اس عمر بڑھنے کے ساتھ نیند سے متعلق بیماریاں ہو سکتی ہیں.

امریکہ میں یونیورسٹی آف کیلی فورنیا Berkeley کے Bryce Mander نے کہا، 'دماغ کے جن حصے میں سب سے پہلے مسئلہ ہوتی ہے، وہ وہیں حصے ہیں جو گہری نیند میں مددگار ہوتے ہیں.' یوسی برکلے کے جوزف ونر نے کہا کہ عمر بڑھنے کے ساتھ نیند میں کمی کا تعلق میموری کم ہونے سے بھی منسلک ہے.

نیند کی کمی سے جھرریاں اور بال سفید ہونے جیسے مسائل کے علاوہ الزائمر کی بیماری، دل سے متعلق بیماری، موٹاپا اور ذیابیطس جیسی بیماریاں بھی وابستہ ہیں. اس کا مطالعہ نیوران میگزین میں شائع ہوا ہے.

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
http://st-josephs.in/

اوپینین پول

کون جیتے گا ایشیا کپ 2018 ٹرافی

انڈیا
پاکستان
بنگلہ دیش
http://www.darussalambank.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2018 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.