the etemaad urdu daily news
آیت شریف حدیث شریف وقت نماز

ای پیپر

To Advertise Here
Please Contact
editor@etemaaddaily.com

گھر میں، پارٹی میں یا پھر کسی فیسٹیول پر یا ریستوران میں آپ سب سے پہلے نمکین کھانا جیسے- چپاتی، دال، سبزی یا چاول وغیرہ کھاتے ہیں اور اس کے بعد ہی کچھ میٹھا کھاتے ہیں. باپ دادا کا بھی یہی خیال ہے کہ کھانے کا آغاز ہمیشہ مصالے کھانے سے کرنی چاہئے اور میٹھی کھا کر ختم کرنا چاہئے.

کیا آپ جانتے ہیں کہ کھانے کے بعد میٹھا کھانے سے کیا ہوتا ہے؟ لیکن آپ نے کبھی سوچا ہے کہ کھانے کے آغاز میں سب سے پہلے میٹھا کیوں نہیں کھانا چاہئے یا پہلے مصالحے دار چیزیں ہی کیوں کھانا چاہیئے؟ ظاہر ہے یہ ایک ایسا سوال ہے جس کا جواب تمام لوگ جاننا چاہیں گے. واقعی میں بہت سے لوگ ایسا سمجھتے ہیں کہ یہ سالوں سے چلی آ رہی ایک روایت ہے. لیکن آپ کو بتا دیں کہ اس کے پیچھے سائنسی حقیقت ہے.

جب آپ سپاسي فوڈ کھاتے ہیں، تو آپ کے جسم عمل انہضام رس اور ایسڈ جاری کرتا ہے جو عمل انہضام کے عمل کو بڑھاتے ہیں. سپاسي فوڈز کھانے سے یہ بھی یقینی ہوتا ہے کہ آپ کا عمل انہضام صحیح طرح ہو رہا ہے. دوسری طرف میٹھی چیزوں میں کاربوہائیڈریٹس کی مقدار زیادہ ہوتی ہے، جس عمل انہضام سست ہو سکتا ہے. اس کے علاوہ میٹھی کی انٹیک امینو ایسڈ Absorption کے جذب میں اضافہ ہے. tryptophan کو Serotonin کی ایک neurotransmitters کے ہے جو خوشی کے جذبے سے منسلک ہے یعنی میٹھا کھانے سے آپ کو خوشی ہوتی ہے. یہی وجہ ہے کہ آپ کو کھانے کے بعد میٹھا کھاتے ہیں.

تاہم وائٹ شوگر سے بننے والی میٹھی چیزوں کو صحت مند نہیں مانا جاتا ہے. چینی سے تیار چیزوں کا طویل استعمال کرنے سے آپ کو موٹاپے اور دیگر صحت پیچیدگیوں کا خطرہ ہو سکتا ہے.

اس پوسٹ کے لئے کوئی تبصرہ نہیں ہے.
تبصرہ کیجئے
نام:
ای میل:
تبصرہ:
بتایا گیا کوڈ داخل کرے:


Can't read the image? click here to refresh
http://st-josephs.in/

اوپینین پول

کون جیتے گا ایشیا کپ 2018 ٹرافی

انڈیا
پاکستان
بنگلہ دیش
http://www.darussalambank.com

موسم کا حال

حیدرآباد

etemaad rishtey - a muslim matrimony
© 2018 Etemaad Urdu Daily, All Rights Reserved.